61

سود ی نظام کے خاتمے کے لئے ڈاکٹر طاہرالقادری کے دئے گئے بلا سود بنکاری نظام سے استفادہ حاصل کیا جا سکتا ہے،غلام علی خان

Spread the love
  • 4
    Shares

اسلام آباد/راولپنڈی(شاہدمحمود)پاکستان عوامی تحریک کے میڈیا کوآرڈینیٹر غلام علی خان نے کہا ہے کہ حکومت وقت سود ی نظام کے خاتمے اور اسلامی بنکاری کے نظام کوعملاً نافذ کرنے کے لئے شیخ الاسلام ڈاکٹر محمد طاہرالقادری کے بلا سود بنکاری کے دئے گئے نظام سے استفادہ حاصل کرکے سودی نظام کو ختم اور اسلامی بنکاری نظام کو نافذ کرسکتی ہے،ان خیالات کااظہار انہوں نے گزشتہ روزعوامی تحریک کے ملک طاہر جاوید،ملک افضل،رہنما یوتھ لیگ وسیم خٹک،ممبر اسلام آباد میڈیا سیل معراج نئیر،صدر ایم ایس ایم کینٹ حمزہ جاوید سے گفتگو کرتے ہوئے کیا،انہوں نے کہا کہ ڈاکٹر طاہرالقادری 1992ء میں ایک عظیم الشان کانفرنس میں بعد اذاں کتابچے کی صورت میں بلا سود بنکاری کے نظام کامکمل خاکہ پیش کر چکے ہیں،مگر بد قسمتی سے اس وقت کی ن لیگی حکومت نے بجائے سودی نظام کا خاتمہ کرنے کے وفاقی شرعی عدالت میں سود ی نظام کو قائم رکھنے کے لئے سٹے آرڈر لے لیا، جو کہ اللہ رسولؐ کے ساتھ کھلا اعلان جنگ تھا،سود ی نظام کی حمایت اور ماڈل ٹاون میں بے گناہوں کے قتل عام کی سزا سابق حکمرانوں کو رسوائی کی صورت میں مل رہی ہے،انہوں نے سانحہ ماڈل ٹاون کیس پر بننے والی نئی جے آئی ٹی پر اطمنان کااظہار کرتے ہوئے کہا کہ عوامی تحریک کے کارکنان نئی جے آئی ٹی سے انصاف کی امید کرتے ہیں ،انہوں نے کہا کہ حکومت اگر مخلص ہے تو ڈاکٹر طاہرالقادری کے بلا سود بنکاری کے دئے گئے نظام سے استفادہ حاصل کرے اور سودی نظام کا کلیتاً خاتمہ کر دے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں