167

’’پاکستان میں بے حیائی کا طوفان آگیا ‘‘ 18سالہ لڑکے نے شادی شدہ خاتون کو شادی کی پیشکش کر دی ، انکار پر اس بد بخت نے کیا شرمناک کام کیا ؟ جانیں

Spread the love
  • 3
    Shares

لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک) آج کل کے دور میں پسند کی شادی کرنا عام بات ہے لیکن پسند کی شادی تب ہی اپنے انجام کو پہنچ سکتی ہے جب لڑکا اور لڑکی دونوں ایک دوسرے کے لیے پسندیدگی کا اظہار کریں ، وگرنہ یک طرفہ پسندیدگی کئی مرتبہ جرائم کی ترغیب دلاتی ہے جس سے کئی ہنستے بستے گھر اُجڑ جاتے ہیں۔ ایسا ہی ایک واقعہ پنجاب کے دارالحکومت لاہور میں پیش آیا جہاں ایک 18 سالہ لڑکے نے شادی شدہ خاتون سے اپنی پسندیدگی کا اظہار کیا اور شادی

کی پیشکش کی لیکن جب خاتون نے انکار کیا تو 18 سالہ نوجوان نے اپنی محبوبہ کے 3 سالہ بچے کو ہی اغوا کر لیا۔
تفصیلات کے مطابق لاہور کے علاقہ جوہر ٹاؤن کی کچی آبادی بیڑھ میں 18 سالہ علی رضا کی 35 سالہ شادی شدہ خانہ بدوش خاتون سے دوستی ہوگئی ۔ علی رضا خاتون کو شادی پر مجبور کرنے لگا، لیکن خاتون نے علی رضا کو بارہا انکار کیا۔ جس پر وہ خاتون کے 3 سالہ بیٹے کو اُٹھا کر بھاگ گیا۔یہ دیکھ کر خاتون نے فوری طور پر ون فائیو پر کال کی، جس پر ڈولفن اسکواڈ حرکت میں آگیا۔ ڈولفن اسکواڈ کی بر وقت کارروائی کی وجہ سے ہی خاتون کی رہائش گاہ سے اگلی ہی گلی میں ملزم علی رضا کو دھر لیا گیا اور ملزم سے 3 سالہ بچہ بازیاب کروا کر اس کی والدہ کے حوالے کر دیا گیا۔ترجمان ڈولفن اسکواڈ کے مطابق ملزم نے ابتدائی تفتیش میں اعتراف کیا ہے کہ شادی سے انکار پر خاتون کو ڈرانے کے لیے اس کے بچے کو اُٹھایا تھا۔ڈولفن اسکواڈ نے گرفتار ملزم علی رضا کو مزید کارروائی کے لیے متعلقہ تھانے کے حوالے کر دیا ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں