97

جہانگیر ترین نے ایک مرتبہ پھر جہاز نکال لیا ۔۔۔ اس بار مشن کیا ہے ؟ تحریک انصاف اب کیا نیا کھیل کھیلنے جا رہی ہے؟ اپوزیشن کی کی نیندیں حرام کر دینے والی خبر آ گئی

Spread the love

لاہور (ویب ڈیسک ) انتخابات 2018 میں واضح برتری نہ ملنے کے بعد تحریک انصاف کو متعدد سیاسی جماعتوں سے اتحاد کرنا پڑ ا لیکن عمران خا ن کو امید تھی کہ مڈ ٹرم انتخابات کے ذریعے وہ اپنی اس کمزوری پر قابو پالیں گے لیکن ان کی حالیہ کارکردگی نے یہ منصوبہ فیل کر دیا ہے، اس کے بعد تحریک انصاف کی اب کوشش یہ ہے کہ وہ دوسری سیاسی جماعتوں کے نظریاتی کارکنوں کو توڑ کر اپنی عددی برتری کو پورا کر سکیں ۔ تفصیلات کے مطابق پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) نے عددی برتری حاصل کرنے کیلئے اپوزیشن جماعتوں کے اراکین

توڑنے کا منصوبہ بنا لیا جبکہ پلان اے کی ناکامی کے بعد پلان بی بھی عملدرآمد کرنے کا فیصلہ کرلیا گیا ہے اور اس حوالے سے وزیراعظم عمران خان نے اہم رہنماؤں کو ٹاسک سونپ دیا ہے۔نجی ٹی وی دنیا نیوز کے صحافی اخلاق باجوہ کے مطابق باوثوق ذرائع کا کہنا ہے کہ تحریک انصاف نے عام انتخاباتی میں واضح کامیابی نہ ملنے پر میڈ ٹرم الیکشن کرانے کا پلان بنایا تھا جو اس کی کارکردگی نے ناکام بنا دیا ہے اس کو مدنظر رکھتے ہوئے اب پلان بی پر عملدرآمد کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ اس حوالے سے ذرائع نے بتایا کہ پی ٹی آئی کی رہنما جہانگیر ترین کو زمہ داری سونپی گئی ہے کہ وہ پنجاب سے تعلق رکھنے والے ن لیگ کے ارکان اسمبلی کو توڑیں اور ان کو بتدریج اسمبلیوں سے استعفے دلواکر تحریک انصاف کی ٹکٹ پر الیکشن لڑوایا جائے۔ابتدائی معلومات کے مطابق چند ارکان اسمبلی کو تحریک انصاف میں شمولیت پر ہر صورت میں دوبارہ منتخب کرانے کی یقین دہانی کرائی گئی ہے جبکہ وسطی اور شمالی پنجاب کے حوالے سے یہ ذمہ داری فواد چوہدری اور راولپنڈی سے تعلق رکھنے والے ایک ایم این اے کو بھی اس پلان پر عملدرآمد یقینی بنانے کی ہدایت کی گئی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں