116

پاکپتن : قتل کے مقدمہ کی پیروی کرنے کی رنجش پر ملزمان نے پولیس کیساتھ مل کر محنت کش پر زمین تنگ کردی

پاکپتن سے ہمارے نمائندے بلال اکرم کی رپورٹ کے مطابق پاکپتن کے نواحی گاؤں میں بھائی کے قتل کے مقدمہ کی پیروی کرنے کی رنجش پر ملزمان نے پولیس کیساتھ مل کر محنت کش پر زمین تنگ کردی آئے روز پولیس کی جانب سے ہراساں کرنے اور رشتہ داروں کے اغوا کیخلاف اہل علاقہ کا شدید احتجاج
تفصیلات کے مطابق پاکپتن میں سکندر چوک کے نواحی گا ؤں ٹِبہ سہیل کے رہائشی محمدسرور بھٹی نے اہل علاقہ کے ہمراہ احتجاج کرتے ہوئے بتایا کہ سردار علی وقاص وغیرہ سے انکا رشتہ کا تنازعہ تھا جسکی رنجش پر ملزمان بصیرپور سے آکر اسکے بھائی محمد علی کو گولیوں کا نشانہ بناکر قتل کرکے فرار ہو گئے،
پولیس چک بیدی کے ایس ایچ او عابد عاشق نے ملزمان کیخلاف مقدمہ درج کرکے انکو سزا دلوانے کی بجائے ملزمان کو رہا کردیا، کیونکہ ملزمان اور ایس ایچ او ایک ہی علاقہ کے آپس میں ہمسائے تھے،

ایس ایچ او عابد عاشق نے ملزمان کیخلاف مقدمہ کی پیروی سے باز رہنے کےلئے متاثرہ کے گھر چھاپہ مار کرمدعی کے رشتہ داروں آصف اور نویدکو اٹھا کر لے گیا جنکا علم ہی نہیں زندہ ہیں یا مار دئیے گئے ہیں،
متاثرہ محمد سرور اور اہل علاقہ نے پولیس اور ملزمان کی جانب سے کئے جانے ظلم وستم کیخلاف وزیر اعلی پنجاب اور آئی جی پنجاب سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں